fbpx

The Report Center – رپورٹ سنٹر

گلاب کی کاشتکاری

زرعی ماہرین نے بتایاہے کہ گلاب کاپھول اپنی خوبصورتی کی وجہ سے کوئین آف فلاورزکہلاتاہے دنیابھرمیں گلاب کی 20ہزار سے زائداقسام ہیں، گلاب کے پودے نومبر سے فروری کے مہینے تک لگائے جاسکتے ہیں جہاں گلاب لگاناہووہاں کی ز مین بھربھری زرخیزاوراچھے نکاس والی ہوزمین کا تعامل PH 6سے 6.5ہونی چاہیے، سخت زمین پرگلاب کامیاب نہیں ہوتا، گلاب کیلئے زمین کی تیاری موسم گرمامیں کریں تاکہ دھوپ خوب لگے اورموسم برسات میں بارش کے بعدزمین اچھی طرح تیارہو جائے زمین اڑھائی فٹ گہرائی تک کھودکراسے تیارکریںپودے لگانے کیلئی 2*2*2 کے فٹ سائز کے کھڑے کھودیں اوپر والی ایک فٹ مٹی الگ کریں اورنیچے والی ایک فٹ مٹی دوسری طرف رکھ لیں پودے لگانے سے ایک ہفتہ پہلے گڑھیں کھودیں، گڑھوں کوکھلا چھوڑدیں تاکہ روشنی اورہواسے زمین کوفائدہ پہنچے، اس کے بعد گڑھابھرنے کیلئے اوپر والی ایک فٹ مٹی 50 فیصدگوبرکی کھاد 20 فیصد پتوں کی کھاد 20 فیصد 10 فیصدبھل کاآمیزہ تیارکریںاوا س کوپودے لگانے کیلئے گڑھوں میں استعمال کریں۔کھودے گئے گڑھوں میںتیارشدہ مٹی کاآمیزہ ڈالی پودے کوگڑھے میں سیدھا کھڑا کریں اورمٹی ڈالتے جائیں، پودے کے تنے کے ساتھ کی مٹی تھوڑی اونچی رکھیں پودے کے اردگردمٹی کواچھی طرح دبادیں، ہائیبرڈٹی گلاب کیلئے پودے سے پودے کا فاصلہ3فٹ ہوناچاہیے جبکہ قطارسے قطار کافاصلہ بھی اتنا ہی رکھیں تاکہ پودوں کی گوڈی اوردوسرے کام آسانی سے ہوسکیں۔

اس خبر پر بحث کرنے کے لئے ابھی ہمارے پورٹل پر فری رجسٹر کریں۔

زمرے
Close Menu