fbpx

The Report Center- رپورٹ سنٹر

پاکستان کی کونسی دھمکی سے بنگلہ دیش نے گھٹنے ٹیک دئے

بنگلہ دیش کو پی سی بی کی طرف سے پیغام پہنچایا گیا تھا کہ اگر پاکستان کا دورہ نہیں کیا گیا تو پھر پاکستانی کرکٹرز کو بھی بی پی ایل میں شرکت سے روک دیا جائے گا-

تفصیلات کے مطابق کچھ ذرائع کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ پی سی بی کی ایک دھمکی کے بعد بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ گھٹنے ٹیکنے پر مجبور ہوا اور پھر دورہ پاکستان کا اعلان کر دیا گیا۔ بتایا جا رہا ہے کہ بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کی جانب سے پاکستان کے دورے کے حوالے سے خوامخواہ کے بہانے کرنے پر پی سی بی نے دھمکی دی تھی کہ اگر پاکستان کا دورہ نہ کیا گیا تو پھر بنگلہ دیش پریمیئر لیگ کھیلنے میں مصروف پاکستانی کرکٹرز کو بھی واپس بلا لیا جائے گا۔ چونکہ بنگلہ دیش پریمیئر لیگ کی رونک پاکستانی کرکٹرز کی وجہ سے ہی ہوتی ہے، اس لیے بنگلہ دیش کرکٹ بورڈ اپنی کرکٹ لیگ کو ناکامی سے بچانے کیلئے اپنی ٹیم پاکستان بھیجنے کیلئے راضی ہوا۔ واضح رہے کہ بنگلہ دیش کرکٹ ٹیم کے دورہ پاکستان کے حتمی معاملات طے پاگئے ہیں-ذرائع کے مطابق بنگلہ دیش کرکٹ ٹیم 24 سے 27 جنوری تک لاہور میں تین ٹی ٹونٹی میچز کھیلے گی،7 سے11 فروری تک راولپنڈی میں ایک ٹیسٹ ہوگا،پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل )کے اختتام پر ایک ون ڈے انٹرنیشنل3 اپریل کو کراچی میں کھیلا جائے گا،دوسرا ٹیسٹ میچ 5 سے 9 اپریل تک کراچی میں ہوگا-چیئرمین پی سی بی احسان مانی کا کہنا تھا کہ ہم صدر آئی سی سی ششانک منوہر کی معاونت کے مشکور ہیں، پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیف ایگزیکٹو وسیم خان کا کہنا تھا کہ نئے شیڈول کی تیاری دونوں بورڈز کی جیت ہے، بنگلہ دیش کرکٹ ٹیم تین مرتبہ پاکستان آئے گی ، جو ہمارے پرامن ہونے کا ثبوت ہے-یاد رہے کہ بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ نے پہلے دورہ پاکستان میں ٹیسٹ سیریز کھیلنے سے انکار کردیا تھا اور صرف ٹی ٹونٹی میچز کھیلنے پر آمادگی ظاہر کی تھی-

اس خبر پر بحث کرنے کے لئے ابھی ہمارے پورٹل پر فری رجسٹر کریں۔

تصنيفات
Close Menu