fbpx

The Report Center – رپورٹ سنٹر

کورونا کی وجہ سے مسافر نا ہونے کہ برابر فضائی کمپنیوں کے کرایوں میں زبردست کمی

کراچی (ویب ڈیسک) عالمی مارکیٹ میں تیل کی قیمتیں گرنے اور کورونا وائرس کی وجہ سے فضائی ٹریفک میں کمی کے بعد فضائی کمپنیوں نے اپنے کرایوں میں زبردست کمی کردی ہے تاہم پاکستان میں فضائی کمپنیوں کے درمیان مقابلے کی کوئی فضا نہ ہونے اور کسی ریگولیٹر کی موجودگی نہ ہونے کے باعث پاکستان کے شہری اس سے محروم ہیں ۔ پاکستان میں اندرون ملک پروازوں کے لیے پی آئی اے ، سیرین ائر اور ائر بلیو نے کارٹل بنایا ہوا ہے جس کے بعد سے وہ انتہائی مہنگے داموں اندرون ملک پروازوں کے لیے کرایے وصول کررہی ہیں ۔ اس وقت کراچی لاہور اور کراچی اسلام آباد کا یکطرفہ کرایہ 14 ہزار روپے سے 18 ہزار روپے کے درمیان وصول کیا جارہا ہے ۔ ایک خبر کے مطابق کویت نے کرونا وائرس کا پھیلاؤ روکنے کے لیے تمام کمرشل پروازیں معطل کردی ہیں جبکہ دفاتر اور اسکول کالجز بند کردیے گئے ہیں۔عرب ویب سائٹ کے مطابق حکومت کویت نے کرونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے احتیاطی تدابیر کے طور پر بدھ کو کئی نئے اہم اقدامات کا اعلان کیا ہے۔ان اقدامات کے تحت جمعہ 13 مارچ سے کویت آنے جانے والی تمام کمرشل پروازیں تا اطلاع ثانی معطل کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ایئر کارگو، کویتی اور ان کے رشتے دار پروازوں کی بندش کے فیصلے سے مستثنیٰ ہوں گے۔حکومت کویت نے کرونا کا پھیلاؤ روکنے کے لیے 13 مارچ سے تمام سرکاری اور نجی ادارے 2 ہفتے کے لیے بند رکھنے کا بھی اعلان کیا ہے۔ ریستورانوں، قہوہ خانوں اور شاپنگ سینٹرز آنے جانے اور لوگوں کے اجتماع کی ممانعت کردی گئی ہے۔کویت میں تمام بینک اور ان کی شاخیں بھی جمعرات سے 29 مارچ تک بند کردی گئی ہیں، بینک سروسز آن لائن دستیاب رہیں گی۔ کویتی اسٹاک مارکیٹ بھی 2 ہفتے کے لیے بند کردی گئی ہے۔کویتی وزارت صحت کا کہنا ہے کہ گزشتہ 24 گھنٹے کے دوران کویت میں مزید 3 کرونا کے مریضوں کی تصدیق ہوئی ہے، مجموعی طور پر مریضوں کی تعداد 72 ہوگئی ہے۔

اس خبر پر بحث کرنے کے لئے ابھی ہمارے پورٹل پر فری رجسٹر کریں۔

زمرے
Close Menu