سعودی عرب میں کورونا کی تباہ کاریاں جاری ایک دن میں کتنی اموات واقعہ ہوئی

ریاض (ویب ڈیسک) سعودی عرب میں کورونا کے 3ہزار392 نئے کیسز سامنے آگئے، مزید 40مریض جاں بحق، اعدادوشمار کے مطابق سعودی عرب میں کووڈ19 کے مزید 3ہزار392 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جس کے بعد مملکت میں کورونا کے مجموعی کیسز کی تعداد 1لاکھ 61ہزار5 ہوگئی ہے۔ گزشتہ 24گھنٹوں کے دوران ملک میں مزید
چالیس اموات کے بعد کورونا سے اب تک ہونے والی اموات کی کل گنتی 1307تک پہنچ چکی ہے۔ملک میں مزید 4ہزار45 مزید مریض صحتیاب ہوگئے ہیں جس کے بعد صحتیاب ہونے والوں کی کل تعداد 1لاکھ 5ہزار175 ہوگئی ہے۔ وزارت صحت کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے حوالے سے اگرچہ کرفیو اور لاک ڈاون ختم کیا جارہا ہے تاہم احتیاطی تدابیر کو کسی بھی حالت میں نظر انداز نہیں کرنا چاہئے۔ سماجی فاصلے کے اصول پر عمل درآمد لازمی ہے جبکہ ماسک یا منہ و ناک کو ڈھانپنا بھی لازمی ہے علاوہ ازیں ہاتھوں کی صفائی کا بھی خصوصی اہتمام کیا جائے۔واضح رہے سعودی حکومت نے کورونا وباء کے باعث کاروباری اور معاشی سرگرمیوں پر عائد پابندیاں بھی آج سے اٹھا لی ہیں۔ سعودی عرب میں لاک ڈاؤن آج 21 جون صبح 6 بجے سے ہٹا دیا گیا ہے۔ جس کے ساتھ ہی معمولات زندگی، دفاترز، کاروبار اور تجارتی سرگرمیوں کی 24 گھنٹے اجازت ہوگی۔ اسی طرح ہوٹل بھی کھول دیے جائیں گے۔ تاہم بین الاقوامی پروازوں، باربر شاپس، اور سیلون پر پابندی برقرار رہے گی۔حکومت کی قائم کردہ کمیٹی انٹرنیشنل فلائٹ آپریشن بحال کرنے پر نظرثانی کرے گی۔ تب تک بین الاقوامی سفری پابندیاں، زمینی بارڈز اور سمندری حدود مزید احکامات تک بند رہے گی۔ سعودی عرب میں شادی گھر بھی کھول دیے گئے ہیں۔سعودی وزارت داخلہ کے ترجمان طلال الشلھوب نے کہا کہ وزارت داخلہ نے مملکت بھر میں تمام اقتصادی و تجارتی سرگرمیوں کی بحالی اور جملہ معمولات زندگی مارچ سے پہلے والے نظام کے مطابق بحال کرنے کا جو فیصلہ کیا ہے شادی گھربھی اسی نظام کے تحت بحال کردیے گئے ہیں۔ترجمان کا کہنا ہے کہ شادی گھروں کے مالکان سے کہا گیا ہے کہ کسی بھی تقریب میں بیک وقت 50 سے زیادہ افراد جمع نہ ہوں۔طلال الشلھوب نے بتایا کہ شادی گھروں کی انتظامیہ کو تنبیہ کی گئی ہے کہ اگر ان کے یہاں ایک وقت میں پچاس سے زیادہ افراد کا اجتماع نظر آنے گا تو اس کا نوٹس لیا جائے گا۔ خلاف ورزی پر مقررہ جرمانے وصول کیے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ حفاظتی ماسک، سماجی فاصلہ اور مسلسل ہاتھ دھوتے رہنے کی عام پابندیاں بھی شادی گھروں پر لاگو ہوں گی۔

اس خبر پر بحث کرنے کے لئے ابھی ہمارے پورٹل پر فری رجسٹر کریں۔

زمرے