پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں منگل کو بھی تیزی کا تسلسل برقرار

پاکستان اسٹاک ایکسچینج 5ماہ کی بلند ترین سطح پر آگئی۔ پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں منگل کو بھی تیزی کا تسلسل برقرار رہا اور کے ایس ای 100 انڈیکس مزید 406.11 پوائنٹس کے اضافے سے 38627.27 پوائنٹس کی بلند سطح پر پہنچ گیا جب کہ 64.03 فی صد کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا جس کے سبب مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت 59 ارب 57 کروڑ 27 لاکھ روپے بڑھ گئی اور حصص کی لین دین کے لحاظ سے کاروباری حجم بھی پیر کی نسبت 36.85 فیصد زائد رہا ۔گزشتہ روز ٹریڈنگ کا آغاز مثبت زون میں ہوا اور ٹریڈنگ کے آغاز سے ہی سرمایہ کاروں کی جانب سے حصص خریداری میں بھرپور دلچسپی برقرار رہی جس کے باعث کے ایس ای 100 انڈیکس 38300 ،38400، 38500 اور 38600 کی نفسیاتی حدیں بحال ہوگئیں تیزی کا رجحان آخر تک برقرار رہا اور کاروبار کے اختتام پرکے ایس ای 100 انڈیکس 406.11 پوائنٹس کے اضافے سے 38627.27 پوائنٹس پر بند ہوا جب کہ کے ایس ای 30 انڈیکس بھی 187.43 پوائنٹس کے اضافے سے 16821.71 پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئرز انڈیکس 225.05 پوائنٹس کے اضافے سے 27253.42 پوائنٹس کی سطح پربند ہوا۔ گذشتہ روز مجموعی طور پر 392 کمپنیوں کا کاروبار ہوا جس میں سے 251 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ 122 میں کمی اور 19 کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں استحکام رہا۔بیشتر کمپنیوں کے شیئرز کی قیمتیں بڑھنے کے باعث مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت 71 کھرب 54 ارب 96 کروڑ 9 لاکھ روپے سے بڑھ کر 72 کھرب 14 ارب 26 کروڑ 87 لاکھ روپے ہوگئی۔ قیمتوں میں اتار چڑھاوٗ کے لحاظ سے وائتھ پاک کے حصص 46.99 روپے کے اضافے سے 994.49 روپے اورفلپ موریس 24.99 روپے کے اضافے سے 1775 روپے ہوگئی جب کہ نیسلے پاکستان 141.21 روپے کی کمی سے 6577.12 روپے اورسیپ ہائر ٹیکس کے حصص 51.99 روپے کی کمی سے 835.01 روپے ہوگئی

اس خبر پر بحث کرنے کے لئے ابھی ہمارے پورٹل پر فری رجسٹر کریں۔

جواب دیں

زمرے