بھارتی جیل میں تشدد سے پاکستانی قیدی جاں بحق

بھارتی جیل میں تشدد سے پاکستانی قیدی جاں بحق ہو گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق بھارتی شہر گجرات میں پاکستانی قیدی پر بری طرح تشدد کیا گیا جس کے بعد وہ اس دنیا سے رخصت ہو گیا ہے۔ ترجمان فشرمینز کوآپریٹو سوسائٹی کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ عبدالکریم بھٹی اور دیگر4 ماہی گیر جنوری میں شکار کے لیے گئے تھے جنہیں بھارتی سیکیورٹی اہلکاروں نے گرفتار کرکے بھارتی شہر گجرات کی جیل میں قید کردیا تھا، تاہم وہاں اسے بری طرح تشدد کا نشانہ بنایا گیا جس کے بعد وہ جاں بحق ہو گیا ہے۔ ترجمان کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ عبدالکریم بھٹی کی لاش بھارت سے واہگہ بارڈرپھر کراچی منتقل کی گئی، میت ایدھی سہراب گوٹھ سردخانے میں رکھی گئی ہے۔ ترجمان کی جانب سے مزید بتایا گیا ہے کہ ماہی گیر کا انتقال یکم جولائی کو بھارتی جیل میں ہوا تھا جس کے بعد اب اس کی میت کو پاکستان لایا گیا ہے۔ ترجمان فشرمینزکوآپریٹو سوسائٹی کے مطابق عبدالکریم کی میت کو صبح سردخانے سے بھٹ آئی لینڈ منتقل کیا جائے گا جہاں ان کی نماز جنازہ بعد نماز ظہرادا کی جائے گی، دوپہر 2 بجے نیٹی جیٹی پل پر میت رکھ کر ماہی گیر احتجاج کریں گے۔ خیال رہے کہ وقتاَ فوقتاََ پاکستان اور بھارت کی جانب سے اکثر ماہی گیر بارڈر کراس کر لیتے ہیں جس کے بعد انہیں دشمن ملک کی جانب سے مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ پاکستان نے اس معاملے پر ہمیشہ خیرسگالی کی مثال قائم کی ہے لیکن بھارت کی جانب سے ہمیشہ تشدد ہی کیا جاتا رہا ہے جس کی ایک اور مثال اب سب کے سامنے آ گئی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ عبدالکریم بھٹی اور دیگر4 ماہی گیر جنوری میں شکار کے لیے گئے تھے جنہیں بھارتی سیکیورٹی اہلکاروں نے گرفتار کرکے بھارتی شہر گجرات کی جیل میں قید کردیا تھا جہاں اسے تشدد کا نشانہ بنایا گیا

اس خبر پر بحث کرنے کے لئے ابھی ہمارے پورٹل پر فری رجسٹر کریں۔

جواب دیں

زمرے