بھارت کے 5 اگست سے منسلک اقدامات کشمیریوں کو انکے بنیادی حقوق سے محروم کرنے کی کوشش ہے۔

امریکا میں پاکستان کے سفیر ڈاکٹر اسد مجید خان نے کہاہے کہ 5 اگست کے بھارتی اقدامات بین الاقوامی قوانین اور اقوام متحدہ سیکیورٹی کونسل کی قراردادوں کی کھلی خلاف ورزی ہیں۔ انہوں نے کشمیر امریکن ویلفیئر ایسوسی ایشن کے زیرا ہتمام ’’یوم استحصال کشمیر ‘‘کے حوالے سے واشنگٹن میں ویبینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ بھارت کے 5 اگست سے منسلک اقدامات کشمیریوں کو انکے بنیادی حقوق سے محروم کرنے کی کوشش ہے۔ سیکڑوں شہادتیں، ہزاروں گرفتاریاں اور میڈیا پر مسلسل کریک ڈاؤن بھی کشمیری مزاحمت کو کم نہیں کر پائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ 5 اگست کو رام مندر کا افتتاح بھارتی فاش ازم آر ایس ایس کا ایجنڈہ ہے اور دنیا کی توجہ ہٹانے کی مذموم کوشش ہے۔ برٹش پاکستانی رکن پارلیمنٹ افضل خان نے کہا کہ بھارت نے انتہا پسندی اور ہندتوا آئیڈیالوجی کا جو راستہ اختیار کیا ہے وہ خود بھارت کیلئے خطرناک ہے اور اس میں بسنے والے اقلیتوں کو شکار بنا رہا ہے ۔