کرونا کنٹرول میں، حکومت نے لاک ڈاون میں نرمی کرتے ہوئے مزید شعبہ جات کھولنے کا فیصلہ کرلیا

حکومت کا ریسٹورنٹس، تفریحی مقامات اور شادی ہالز سمیت دیگر شعبہ جات اور کاروبار کھولنے کا اعلان، نجی ٹی وی کے مطابق وفاقی وزیر برائے ترقی و منصوبہ بندی اسد عمر کی زیرصدارت این سی او سی کا اجلاس ہوا جس میں ملک میں کورونا وبا کی صورتحال پر غور کیا گیا۔ اجلاس کے بعد اسد عمر نے میڈیا بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ ملک میں کورونا وبا میں کمی ہوگئی اور صورت بحال بھی کافی بہتر ہے، حکومت نے لاک ڈائون میں اور نرمی کرتے ہوئے مزید شعبہ جات کھولنے کا فیصلہ کیا ہے۔اسد عمر نے بتایا کہ 8 اگست سے سیاحتی مقامات جبکہ 10 اگست سے پارکس، تفریحی مقامات ایکسپو ہالز، بیوٹی پارلرز، مزارات، سینما، تھیٹرز، پبلک پارکس، جم، کلب، ہوٹل اور ریسٹورنٹس کھول دیے جائیں گے ،15 ستمبر سے شادی ہالز کھولے جاسکتے ہیں اور ہوٹلز میں بھی شادی کی تقریبات ہوسکتی ہیں۔ روڈ ٹرانسپورٹ کو بھی کھولا جارہا ہے تاہم میٹرو سروسز میں کھڑے ہو کر سفر کی اجازت نہیں ہوگی جبکہ موٹر سائیکل کی ڈبل سواری کی اجازت بھی دینے کا فیصلہ کیا گیا ہے، دفتری اوقات کار بھی معمول کے مطابق بحال کیے جارہے ہیں اور تمام مارکیٹیں پرانے سسٹم کے مطابق کھولنے کی اجازت دی جارہی ہے، ان کے لیے وقت کی پابندی اور ہفتہ و اتوار کی چھٹی ختم کی جارہی ہے۔این سی او سی کے اجلاس میں تعلیمی اداروں کو 15 ستمبر کو کھولنے کا فیصلہ برقرار رکھا گیاہے۔