اسلام آباد ہائیکورٹ نے فرانس سے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کی درخواست نمٹا دی

اسلام آباد ہائیکورٹ نے گستاخانہ خاکوں کے معاملے پر فرانس سے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کی درخواست پر معاملہ وفاقی کابینہ کے سامنے رکھنے کا حکم دیتے ہوئے کیس نمٹا دیا۔بدھ کے روز اسلام آباد ہائیکورٹ میں فرانس میں سرکاری سطح پرگستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے معاملے پر فرانس سے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کی درخواست پر سماعت ہوئی، جسٹس محسن اختر کیانی نے شہری کی درخواست پر سماعت کی۔درخواست گزار شہدا فاؤنڈیشن کے وکیل طارق اسد عدالت کے سامنے پیش ہوئے اور موقف اختیار کیا کہ فرانس میں خاکے شائع کرنے پر ترکی، قطر سمیت متعدد مسلم ممالک نے احتجاج کیا ہے، لیکن یہاں عوامی ترجمان نہیں کی گئی جس پر معزز جج محسن اختر کیانی نے کہا کہ پاکستان کی حکومت نے واقعہ کی مذمت توکی ہے ، فرانسیسی سفیرکو بھی بلایا ہے، قومی اسمبلی سے قرار داد بھی پاس ہوئی ہے اور پارلیمنٹ سے قرار دادکا آنا بھی عوام کی ترجمانی ہے۔ عدالت نے فرانس سے سفارتی تعلقات منقطع کرنے کے معاملہ کو کابینہ کے سامنے رکھتے کا حکم دیتے ہوئے ریمارکس دیئے کہ کابینہ عوامی جذبات کو سامنے رکھتے ہوئے فیصلہ کرے ۔